28

جنوبی افریقی فٹ بالر پر میچ کے دوران ایسی چیز آ گری کہ جان کی بازی ہار گیا، یہ کیا چیز تھی اور پھر اس کیساتھ کیا ہوا؟ ایسی خبر آ گئی جس کا آپ تصور بھی نہیں کر سکتے

جوہانسبرگ (ڈیلی پاکستان آن لائن) میچ کے دوران آسمانی بجلی سے کومہ میں چلے جانے والے جنوبی افریقی فٹ بالر جان کی بازی ہار گئے ہیں۔ فٹ بالر کے کلب مارٹزبرگ یونائیٹڈ نے سٹرائیکر لیویاندا نٹشنگزی کی ہلاکت کی تصدیق کی ہے۔21 سالہ لیویاندا نٹشنگزی اس سال یکم مارچ کو دوستانہ میچ کے دوران بجلی گرنے سے زخمی ہونے کے بعد کومہ میں تھے۔

 

فٹ بال کلب نے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ فیس بک پر جاری پیغام میں انہیں خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ ایک ابھرتے ہوئے ستارے تھے اور ان کی ٹیم غم کی حالت میں ہے۔مارٹز برگ یونائیٹڈ اس وقت جنوبی افریقہ کی پریمیئر لیگ میں چوتھے نمبر پر ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے بی بی سی کے مطابق مارٹزبرگ کے چیئرمین فاروق کدودیا نے اپنے بیان میں کہا کہ ”ہم لیواندا کے جانے سے انتہائی غمزدہ ہیں، جو بھرپور صلاحیتوں کے مالک ایک پرجوش کھلاڑی تھے۔ مارٹز برگ یونائیٹڈ فٹ بال کلب کی جانب سے میں نٹشنگزی خاندان کیلئے دلی افسوس کا اظہار کرتا ہوں۔“

نٹشنگیز نے مارٹز برگ یونائیٹڈ کی نمائندگی کرتے ہوئے دو سیزن قبل کیئزر چیفس کے خلاف اپنا پہلا میچ کھیلا تھا۔لیویاندا نٹشنگزی اور دیگر دو کھلاڑی کوازولونٹل کے خلاف میچ کے دوران آسمانی بجلی گرنے سے زخمی ہوئے تھے۔دیگر دونوں کھلاڑی معمولی زخمی ہوئے جبکہ نٹشنگزی کو چھاتی پر شدید زخم آئے تھے۔

ان کی موت حالیہ برسوں میں مارٹزبرگ یونائیٹڈ کے ساتھ پیش آنے والا تیسرا افسوسناک واقعہ ہے۔اس سے قبل اسی کلب کے مڈفیلڈر 27 سالہ موندلی سیلے 2016ءمیں اور 20 سالہ ملوندی دلمنی 2017ءمیں کار حادثوں میں ہلاک ہوگئے تھے۔

Source

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں